شہبازشریف نےبلاول بھٹو کے مطالبے کی حمایت کردی

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد:قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف شہبازشریف نےپاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹوزرداری کےمطالبےکی حمایت کردی۔

اسپیکر اسد قیصر کی زیرصدارت ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس میں اپوزیشن لیڈر شہبازشریف نے چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹوزرداری کےمطالبےکی حمایت کرتے ہوئے کہا کہ آصف زرداری سمیت دیگرکےپروڈکشن آرڈرجاری کئے جائیں۔

شہبازشریف نے کہا کہ منتخب ارکان علاقوں کولاکھوں ووٹ لےکرآئےہیں،بجٹ سیشن میں چاروں صوبوں کی نمائندگی ہونی چاہئے،چاروں صوبوں کےنمائندگان کی حاضری یقینی بنائی جائے،امیدہےآپ آج غیرحاضرارکان کی حاضری یقینی بنائیں گے،ایوان کے روایات کو4روزتک پامال کیاگیا۔

مسلم لیگ ن کے صدر نے کہا کہ پنجاب میں پی ٹی آئی کی اپوزیشن نےطوفان بدتمیزی مچایاتھا،ہم نےپی ٹی آئی کی بدتمیزی کوبردباری سےبرداشت کیا،ہاؤس چلانےکیلئےسب سےبڑی ذمہ داری آپ پرہے ،2013میں عوام نےن لیگ کو منتخب کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ن لیگ کو اقتدارسنبھالتےہی چیلنجز کاسامناکرناپڑا،بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ ایک بڑا چیلنج تھا،مشرف دور میں بھاشاڈیم کا سنگ بنیاد نہیں رکھاگیا تھا،حقیقت میں بھاشاڈیم کیلئےکچھ نہیں کیاگیاتھا، مشرف دورمیں عوام کی بھلائی کیلئےکوئی کام نہیں ہوا،

شہبازشریف کا کہنا تھا کہ میں نےجذبات میں آکرلوڈشیڈنگ کےخاتمےکیلئے6ماہ کاکہاتھا،2014 کےابتداء میں پی ٹی آئی نے7ماہ تک ملک میں افراتفری مچائےرکھی،پی ٹی آئی کےدھرنےسےملکی معیشت کوتباہ کرنےکی کوشش کی گئی،دھرنےکےباعث چینی صدر کا دورہ ملتوی ہوا،دھرنےکےباعث چینی صدرکےدورےمیں7ماہ کی تاخیر ہوئی۔

اپوزیشن لیڈ رنے مزید کہا کہ چین نےنوازشریف کےساتھ مل کرسی پیک کامعاہدہ کیا،ہمارےدورمیں توانائی کےمنصوبےلگائےگئے،پی ٹی آئی اپوزیشن نےہم پرتنقید کی،چیلنجز کےباوجود ہم نےہمت نہیں ہاری،ہمارےدورمیں11ہزارمیگاواٹ بجلی کےمنصوبےلگائےگئے۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی نےکہاخیبرپختونخوامیں اتنی بجلی پیداکریں گےجوپورےپاکستان کوروشن کردےگی،خیبرپختونخوا میں منفی 6میگاواٹ بجلی پیداکی گئی،خیبرپختونخوامیں80میگاواٹ کامنصوبہ لگایاگیا،خیبرپختونخوا72میگاواٹ کےپروجیکٹ کودرست نہ کراسکی۔

شہبازشریف نے کہا کہ نیلم جہلم منصوبےسےمتعلق بھی تحقیقات ہونی چاہئیں،ہم نےمنصوبوں میں اربوں روپے کی بچت کی،2013جی ڈی پی 3اعشاریہ3تھی،ہم5اعشاریہ8پرلےآئے،دنیا مان رہی تھی کہ پاکستان ترقی کی راہ پرگامزن ہوگیاہے،امیدتھی کہ جی ڈی پی6تک پہنچ جائےگی۔

ن لیگ کے صدر نے مزید کہا کہ مہنگائی نےآج غریب آدمی کی زندگی اجیرن کردی ہے،ہمارےدورمیں مہنگائی کی شرح12فیصدتھی،ہم کوشش کرکےمہنگائی کی شرح3فیصد پر لے آئے،ن لیگ کی حکومت نےتعلیم اورصحت کےمیدان میں انقلاب برپاکیا،ہمارےدورمیں40یونیورسٹیز کا سنگ بنیاد رکھاگیا۔

قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ نوازشریف کےدورمیں ٹیکنیکل یونیورسٹی کا سنگ بنیاد رکھاگیا،ہمارےدور میں قیام امن کیلئےبڑے اقدامات کئے گئے،پاک افواج نےدہشتگردوں کا پیچھا کرکےخاتمہ کردیا،قوم پاک فوج کےشہیدوں کوہمیشہ سنہری لفظوں میں یادرکھےگی،آج بنگلہ دیش فی کس آمدنی میں ہم سے آگے ہے۔

انہوں نے کہا کہ افغانستان کی کرنسی بھی پاکستانی کرنسی سےزیادہ مضبوط ہے،ہم ٹیکسٹائل اورگارمنٹس میں بھارت سے آگےتھے،15،20سال پہلےبھارت سے ہمارامقابلہ ہوتاتھا،آج مقابلہ سمٹ کر2شعبوں میں رہ گیا ہے،کیا حکومت کےایک سال میں اخراجات کم ہوگئےہیں؟ہمیشہ بجٹ میں ایک طبقہ خوش اورایک ناراض ہوتاتھا۔

شہبازشریف کا مزید کہنا تھا کہ پہلا موقع ہےجب ہرطبقہ پریشان ہے،اسپتالوں میں ادویات ناپید ہوگئی ہیں،ملکی معیشت کا بھٹہ بیٹھ گیاہے،غریب آدمی کیلئےبچوں کی روٹی پوری کرنابھی مشکل ہوگیاہے،غریب آدمی پریشان ہےروٹی پوری کرو ں یا دوا لاؤں۔

شہبازشریف کی تقریر کےدوران ایوان میں شورشرابا مچ گیا،اسپیکرقومی اسمبلی اسدقیصر نے ممبران کو خاموش رہنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ کراس ٹاک کرنےوالوں کیخلاف ایکشن لوں گا۔

جس کے بعد شہباز شریف نے دوبارہ تقرر کرتے ہوئے کہا کہ کنٹینر پر کھڑے ہوکرعوام کوسنہرے خواب دکھائےگئے،حکومت کی نااہلی نےپاکستان کوجنت کےبجائے جہنم بنادیاہے،آج ڈالرآسمان پرپہنچ گیااورروپیہ کی قدرکم ہوگئی ہے،ہمارےدورمیں ڈالر115کاتھا،آج 157پرپہنچ گیا ہے۔

اپوزیشن لیڈر نے مزید کہا کہ اگریہی حالات رہےتوپاکستان کا کیابنےگا؟حکومت کی نااہلی نےعوام کوشدیددشواری سےدوچارکردیاہے،عمران خان نےعوام کی چیخیں نکال دی ہیں،خیبرپختونخوا حکومت کےقرضوں کی تحقیقات بھی ہونی چاہئیں،وزیراعظم کواین آر او دینےکااختیارنہیں ہے۔

loading...
loading...