امریکا اور اسرائیل پر ایران اور پاکستان میں مداخلت کا الزام

File Photo

File Photo

ترک صدر طیب اردگان نے امریکا اور اسرائیل پر الزام عائد کیا ہے کہ یہ دونوں ممالک ایران اور پاکستان کے اندرونی معاملات میں مداخلت کررہے ہیں۔

فرانس کے دورے پر روانہ ہونے سے قبل ترک صدر نے کہا کہ بعض ممالک میں کھیل کھیلا جارہا ہے اور یہ نوٹ کیا گیا ہے کہ یہ تمام مسلم ممالک ہیں۔

بات چیت میں ترک صدر نے مزید کہا کہ اس سے ان ممالک میں لوگ ایک دوسرے کے خلاف ہورہے ہیں اور یہ شرم کا مقام ہے کہ ہم نے یہ سب کچھ کئی ممالک میں ہوتے ہوئے دیکھا ہے۔

اپنے بیان میں اردگان نے امریکا کی جانب سے پاکستان پر فوجی امداد کی پابندی کو بھی تنقید کا نشانہ بنایا۔

طیب اردگان ن مزید کہا کہ یہ تمام اقدامات زیر زمین افراد کو زیر قبضہ ممالک کے وسائل کو استعمال کرتے ہوئے مزید دولت مند بنانے کیلئے کیے جارہے ہیں، یہ حقائق مسلمانوں سمیت ہر شخص کو معلوم ہونے چاہیئے۔

اپنے بیان میں ترک صدر نے حسن روحانی کو بھی سراہا اور کہا کہ ان کے جمہوریت کی حمایت میں بیان سے تہران میں امن اور استحکام میں معاونت ملی ہے۔

ترکی میں میڈیا میں یہ خبریں گردش کرتی رہی ہیں کہ امریکا اور اسرائیل ایران میں مظاہروں میں ملوث ہے جس کا مقصد مشرق وسطی کو ازسرنو تشکیل دینا ہے۔

Courtesy: Yahoo News