افغانستان: افغان فضائیہ کی بمباری سے 50سے زائد افراد جاں بحق

ریڈیو پاکستان

ریڈیو پاکستان

افغان صوبے قندوز میں افغان فضائیہ کی بمباری کے نتیجے میں جاں بحق افراد کی تعداد50سے زائد ہوگئی ہےجبکہ150سے زائد زخمی ہیں۔

قندوز کےمدرسے میں تقریب دستار بندی کا آغاز ہوا ہی تھا کہ اچانک فضاؤں میں طیاروں کی گھن گرج سے ان معصوموں کےدل دہل اٹھے۔

افغان ایئرفورس کے طیاروں نے مدرسے کے اوپربم گرانے برسانا شروع کردیے۔

افغان فضائیہ کے اس حملے کے بعد تقریب تلپٹ ہوچکی تھی۔قرآن کی تلاوت کی جگہ بچوں کے کرراہنے اور چیخنے کی آوازیں لے چکی تھیں۔

درجنوں جاں بحق اور اس سے کئی زیادہ زخمی ہوکر اسپتال جا پہنچےاور بستر سے موت کو شکست دینے کی تک و دو میں لگے ہوئے ہیں۔

مارے جانے والے سارے کمسن ہیں، بچوں اور عام شہریوں کو نشانہ بنایا گیا۔جاں بحق افراد کوئی طالبان شامل نہیں ہے۔

عینی شاہد کا بیان اپنی جگہ لیکن افغان حکام تو کچھ الگ ہی دعویٰ کررہے ہیں۔

قندوز کی صوبائی کونسل کے رکن مولوی عبداللہ کہتے ہیں حملے میں طالبان کے مدرسے کو نشانہ بنایا گیا۔

جس میں پچاس سے زائد عسکریت پسند مارے گئے۔