کیلے کی چائے: خواب آور دواؤں کا صحت بخش نعم البدل

Untitled-1

رات کو کیلا اُبال کر کھانے کا کیا فائدہ ہے؟ اگر اس نسخے کا عوام کو پتہ لگ جائے تو دنیا بھر کے دواخانوں کو تالا ہی لگ جائے.

کچھ لوگوں کو نیند نہیں آتی اور وہ اس کیلئے خواب آور ادویات کا سہارا لیتے ہیں، جس کے سائیڈ ایفکٹس کی وجہ سے ہم جسمانی طور پر مزید پیچیدگیوں کا شکار ہوجاتے ہیں۔

 لیکن ماہرین صحت کا کہنا ہے کہ ایسی مشکل کیلئے کیلوں والی چائے کا استعمال کریں.اس کے کوئی سائیڈ افیکٹس بھی نہیں اور اس کے استعمال سے آپ کوپرسکون نیند بھی آنے لگی گی.

ماہرین کے مطابق کیلوں میں پوٹاشیم اور میگنیشیم کی وافر مقدار موجود ہوتی ہے اور ان دونوں دھاتوں کی وجہ سے ہمیں پرسکون نیند آنے لگتی ہے. ان کی وجہ سے ہمارے پٹھے بھی مضبوط ہوتے ہیں اور ان میں اکڑاؤ اور کھنچاؤبھی نہیں ہوتا.

اگر انسان مستقل طور پر بے خوابی کا شکار ہوجائے اور باوجود کوشش کے رات کوسونہ پارہا ہو تو بہت تکلیف رہنے لگتی ہے. بےخوابی کی وجہ سے بیماریاں جنم لینے لگتی ہیں، جبکہ ذیابیطس اور جسمانی کمزوری کا خطرہ بڑھ جاتا ہے۔

کیلوں کی چائے کس طرح بنائی جائے؟

 اجزاء:ایک کیلا، ایک گلاس پانی، 2گرام دارچینی۔

طریقہ:  کیلے کو کاٹ کر پانی میں ڈالیں اور دس منٹ تک پانی کوابالیں، اب اس مشروب کو چھان لیں. اس پردارچینی چھڑک دیں اور رات کوسونے سے ایک گھنٹہ پہلے کیلے والی چائے نوش فرمائیں.

اس مشروب کوروزانہ استعمال کرنے سے آپ کو رات کوپرسکون نیند آئے گی.

بشکریہ Realfarmacy

loading...
loading...