روزانہ وزن دیکھنا وزن گھٹا سکتا ہے: تحقیق

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اپنی غذا تبدیل کیے بغیر وزن گھٹانے کی امید بے شک سننے کیلئے بہت اچھی ہوتی ہے۔

لیکن سائنس دانوں نے ایک ایسا طریقہ ڈھونڈا  ہے جس سے وزن کم کیا جاسکتا ہےاور وہ آسان طریقہ ہے کہ وزن کی  روزانہ پیمائش کرنا۔

ڈریکسل یونیورسٹی  اور یونیورسٹی آف پینسلوینیاکے محققین نے240طالبات پر تحقیق کی جس میں معلوم ہوا کہ جن طالبات نے دو سال تک روزانہ اپنے وزن کی پیمائش  کی ان کے بی ایم آئی اور جسم کی چکنائی دونوں  میں ان طالبات کے مقابلے میں جنہوں نے ایسا نہیں کیا،کمی دیکھنے میں آئی۔

مزید یہ کہ خواتین(جو تمام مختلف وزن رکھتی تھیں)کو وزن کم کرنے کا کہا نہیں گیا تھا۔

محققین کوطالبِ علموں  پرتحقیق  کرنے میں خاص دلچسپی تھی کیوں کہ  یونیورسٹی میں وزن کا بڑھ جانا عام ہے بالخصوص پہلے سال میں۔

سال 2009 کی ایک تحقیق میں معلوم ہوا کہ یونیورسٹی کے پہلے سال میں 70 فیصد سے زائد طالبِ  علموں  کا وزن یونیورسٹی میں بڑھ جاتا ہے۔

 لیکن روزانہ وزن کی پیمائش کرنے  سے نہ صرف خواتین کاوزن بڑھنا رک  جاتا ہے بلکہ وزن میں واضح کمی بھی آجاتی ہے۔

محققین یہ بات حتمی طور پر نہیں کہ سکتے کہ روزانہ وزن  کی پیمائش  وزن میں کمی آتی ہے لیکن روزانہ وزن دیکھنا آپ کوی اپنے جسم کی دیکھ بھال کرنے کیلئے حوصلہ افزائی کرتا ہے۔

ڈریکسل میں کالج آف آرٹ اینڈ سائنسزکی اسوسی ایٹ پروفیسر میگھن بٹرائن  کا کہنا تھا کہ اپنا وزن روزانہ دیکھتے رہنا  آپ کو ایسی چیزوں جیسے کہ صحت مند کھانا اور ورزش کرنے، کی طرف مائل کرسکتا ہے جو آپ کا وزن گھٹانے اور وزن بڑھنےسے روکنے میں مددگار ثابت ہوسکتے ہیں۔

Independent بشکریہ

loading...
loading...