تاریخ کی 10 مشہور شخصیات اور ان کے محفوظ کردہ جسمانی اعضاء

Untitled-1

کچھ مشہور شخصیات دنیا سے جانے کے بعد بھی لوگوں کو اپنی قبروں یہاں تک کہ عجائب گھروں کی طرف متوجہ کررہی ہیں. اب آپ سوچ رہے ہوںگے کہ کس طرح؟

تاریخی اعداد و شمارکے مطابق کچھ تاریخی شخصیات کے جسم کے مختلف اعضاء عجائب گھروں میں محفوظ رکھے گۓ ہیں اور اس کے پیچھے اس وجہ بہت منفرد ہے۔

اس آرٹیکل میں ہم نے مشہور تاریخی شخصیات کی فہرست جمع کی ہے جن کے جسم کے حصوں کو محفوظ کیا گیا ہے.ہم جانتے ہیں یہ جاننا آپ کیلئے حیران کن رہے گا۔

٭اولیور کروم ویل کا سر

اولیور کروم ویل انگلینڈ کے سیاستدان تھے جو 3 ستمبر 1658 میں طبعی موت کے باعث انتقال کرگئے تھے۔ ان کی موت کے دو سال بعد ان کے جسم کو بادشاہ چارلس II کے لوگوں ںے قبضے میں لے لیا، اور ان کا سر قلم کردیا۔ اس کی وجہ یہ تھی کہ انہوں نے چارس II کے باپ کو قتل کیا تھا، ان کے سر کو ایک میوزیم میں محفوظ رکھا گیا ہے. ان کا سر سڈنی سوسیکس کالج، کیمبرج میں رکھا گیا ہے.

٭ نپولین بوناپارٹ کا اعضاءِ تناسل                                     

یہ فرانسیسی فوجی رہنما 5 مئی 1821 انتقال کرگئے تھے. ان کی وفات کے بعد، جن ڈاکٹروں نے انکا پورسٹ مارٹم کیا انہوں  ان کے اعضاۓ تناسل کو نکال دیا. جسے کئی بار نمائش اور نیلامی کے لئے پیش کیا گیا۔

٭ گوتم بدھ کے دانت

گوتم بدھ ایک زاہد آدمی تھا جس کے نظریات پر بدھ مذہب کی بنیاد رکھی گئی۔ ان کے پیروکاروں نے ان کے جنازے کے دوران ان کے دانتوں کو نکال دیا. ان کے دانتوں کو سری لنکا میں محفوظ کر کے رکھا گیا ہے۔

٭ البرٹ آئنسٹائین

دنیا میں سب سے زیادہ مشہور سائنسدانوں اور ذہین افراد میں سے ایک تھے جو 18اپریل، 1955کو انتقال کرگئے۔ جیسا کہ ہم جانتے ہیں کہ ان کے مشہورہونے کی وجہ ان کی ذہنی قابلیت تھی ، لہذا ڈاکٹرجنہوں نے البرٹ آئنسٹائین  کا پورسٹ مارٹم کیا  انہوں نےان کے دماغ کو محفوظ کر کے رکھ لیا۔

٭ابراہم لنکن

ابراہم لنکن امریکا کے 16ویں صدر تھے جنہیں 14 اپریل 1865 میں جون ویلکس بوتھ نے گولی مار کر قتل کیا تھا۔ ایک گولی ان کے دماغ میں بھی لگی تھی لہٰذا آپریشن کے دوران خون کے جمنے کی وجہ سے ان کے دماغ کا کچھ حصہ باہر آگیا تھا جسے محفوظ کر کے رکھا گیا ہے۔

٭ گلیلیو گیلیلی کی انگلیاں

مشہور ریاضی دان اورعلم فلکیات کے ماہر 8 جنوری 1642 کو انتقال کر گئے تھے۔ ان کی تین انگلیوں کوان کے ساتھیوں نےمحفوظ کرلیا تھا جو فی الحال فلورنس ہسٹری آف سائنس میوزیم میں واقع ہے.

٭جیری بنتھم کا سر

یہ ایک انگریز فلسفی تھے جوکہ 8 جون 1832 کو انتقال کر گئے تھے۔ ان کی یہ خواہش تھی کہ مرنے کی بعد ان کی لاش کو محفوظ کرکے رکھا جائے، لہٰذا ان کی اس خواہش کو پورا کرتے ہوئے لاش کو محفوظ کرکے رکھا گیا ہے،حال ہی میں سننے میں آیا ہے کہ کئی دہائیوں کے بعد اب ان کی لاش کو نمائش کیلئے پیش کیا جائے گا۔

٭گریگوری راسپیوٹن کااعضائے تناسل

1916 میں راسپیوٹن کو زہر دے کر گولی مار دی گئ تھی اوراس کے اعضائے تناسل کو اس کے جسم سے کاٹ دیا گیا تھا. اس کا یہ مخصوص عضو آج کل سینٹ پیٹرزبرگ میں روسی یوروٹیکا میوزیم میں نمائش کیلئے رکھا گیا ہے۔

٭چےگویرا کےبال

چے گویرا کو 1967 میں بولیوین فوجیوں نے جنگل میں ہلاک کردیا تھا۔ ان کی موت کے بعد ایک سی آئی اے آفس نے ان کے کچھ بال اتار لیئے اوربعد میں اسے 1 لاکھ ڈالر میں فروخت کردیا۔

٭بینوٹوموسولینی کا دماغ

بینوٹو موسولینی کو 1945 میں قتل کر دیا گیا تھا اور امریکی حکومت نے ان کے دماغ کا ایک حصہ تحقیق کیلئے رکھ لیا تھا۔ 2007 میں، اس کے کچھ حصّے ای بے پر خریدنے کے لئے دستیاب تھے.