‘عماد وسیم یا پاکستانی رونالڈو؟’

عماد وسیم میچ کے بہترین کھلاڑی قرار پائے

عماد وسیم میچ کے بہترین کھلاڑی قرار پائے

پاکستان اور آسٹریلیا کے مابین کھیلی جانے والی تین میچز پر مشتمل سیریز کے پہلے ٹی ٹوینٹی میں قومی آل راؤنڈر عماد وسیم نے شاندار واپسی کی۔

تفصیلات کے مطابق ابتدا میں ہی کینگروز کے 3 مستند بلے بازوں کو پویلین پہنچا کر آسٹریلوی ٹیم کی کمر توڑنے والے عماد وسیم نے 12 ماہ کے وقفے کے بعد واپسی کرتے ہوئے پہلے ہی میچ میں مین آف دی میچ کا اعزاز حاصل کیا۔

پاکستان نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے آسٹریلیا کو 156 رنز کا ہدف دیا تو جواب میں عماد نے پہلے ہی اوور میں 2 بلے بازوں کو چلتا کردیا۔

آج کل وکٹ حاصل کرنے کے بعد بولرز نت نئے ‘سلیبریشن اسٹائلز’ متعارف کروارہے ہیں جیسے فاسٹ بولر حسن علی کا جنریٹر اسٹائل عوام میں بے حد مقبول ہے اس کے علاوہ ماضی میں شاہد آفریدی کا ٹریڈ مارک اسٹائل بھی موضوع بحث رہتا تھا اور اسے عوام کی جانب سے خوب پسند کیا جاتا تھا۔

تاہم گزشتہ روز جب عماد وسیم نے پہلے اوور میں کپتان ایرن فنچ اور ڈارسی شارٹ کو چلتا کیا تو ایک نیا ‘سلیبریشن اسٹائل’ متعارف کروایا۔ ان کا یہ انداز معروف فٹبالر کرسٹیانو رونالڈو سے ملتا جُلتا تھا۔

جہاں عماد کو ان کی شاندار کارکردگی پر سراہا گیا وہیں ان کے اس انداز پر کچھ سوشل میڈیا صارفین تنقید کرنا شروع ہوگئے، مختلف فیس بک پیجز پر ان کے اس ‘سلیبریشن اسٹائل’ کو لے کر میمز بنانا شروع کردی گئیں۔

کچھ سوشل میڈیا صارفین اخلاقیات کی سرحد بھی لانگنا شروع ہوگئے، کسی نے کہا کہ ‘لنڈے کے لیجنڈ نے 3 وکٹیں کیا لے لیں، انتہائی واہیات ایکشن متعارف کروا رہا ہے’ تو کوئی انہیں یہ کہنے لگا کہ ‘ابھی تک کوک اسٹوڈیو کوکو کورینا سے باہر نہیں نکلے تھے اور اب یہ چائنا کا رونالڈو دیکھنے کو مل رہا ہے’۔

میچ کے بعد اختتامی تقریب میں جب سابق کپتان رمیز راجہ نے عماد سے اس نئے اسٹائل کے بارے میں پوچھا تو عماد کا کہنا تھا کہ ‘میں نے دی ہَلک والا اسٹائل مارا تھا’۔

loading...
loading...