انتہائی کم ہدف حاصل نہ کرنے پر ممبئی انڈیئنز شدید تنقید کی زد میں

mumbaiکل رات آئی پی ایل کی دو سابقہ فاتح ٹیموں میں مقابلہ ہوا۔ ممبئی انڈیئنز اور سنرائیزر حیدرآباد کے اس مقابلے میں حیدرآباد کی ٹیم نے میدان مار لیا۔ حیدرآباد نے ممبئی کی ٹیم کو 118 رنز کا ایک آسان ہدف دیا مگر ممبئی انڈیئنز پورے سو رنز بھی نہ بنا پائی۔ 87 رنز کا یہ اسکور آئی پی ایل 2018 میں اب تک کا بدترین اسکور ہے۔

اگر آئی پی ایل میں ممبئی انڈیئنز کی کارکردگی دیکھی جائے، تو یہ ٹیم ناقص آغاز کے بعد آہستہ آہستہ انںگ کو مستحکم بنانے اور مناسب اسکور کرنے میں کامیاب ہو ہی جاتی ہے۔ لیکن یہ شکست کرکٹ اور ٹیم کے مداحوں کے لئے ہرگز قابلِ برداشت نہیں تھی۔ اس کی پہلی وجہ تو یہ کہ ان کا اسکور آئی پی ایل 2018 کا سب سے چھوٹا اسکور تھا۔ دوسرا یہ کہ اس ٹیم کا بھی بدترین اسکور تھا۔ لیکن سب سے ذیادہ مایوس کُن بات یہ تھی کہ کل ٹیم کے مالک سچن ٹنڈولکر کی سالگرہ تھی۔ ان کی سالگرہ کے موقع پر ٹیم انہیں تحفے میں اس میچ کی فتح دینا چاہتی تھی مگر ان کی قسمت میں بد ترین شکست ہی تھی۔

میچ کے بعد ٹیم آئی پی ایل کو خیر بعد کہہ کر گھر لوٹ گئی مگر ٹوئیٹر صارفین ان کے زخموں پر نمک چھڑکنے سے باز نہیں آئے۔

سال 2015 میں بھی ممبئی انڈیئنز کا کچھ یہی حال تھا مگر یہ ٹیم تب آئی پی ایل 2015 کی فاتح بنی تھی۔ کچھ نہیں کہا جاسکتا کہ اس بار بھی یہ ٹیم میدان مار لے۔

Thanks to StoryPick

loading...
loading...