ڈبلن ٹیسٹ: پاکستانی ٹیم نے 141 سالہ ریکارڈ توڑ ڈالا

پاک

ڈبلن: پاکستان کرکٹ ٹیم نے ڈبلن میں کھیلے جارہے آئرش تاریخ کے پہلے ٹیسٹ میں نئی تاریخ رقم کردی ہے، قومی ٹیم نے وہ اعزاز حاصل کرلیا جو آج تک کسی اور ٹیم کے حصے میں نہیں آیاتھا۔

پاکستان نے اپنی پہلی اننگز 310 رنز 9 وکٹ کے نقصان پر 310 پر ڈکلیئر کی تو وہ اپنی تاریخ کا پہلا ٹیسٹ کھیلنے والی کسی بھی ٹیم کے خلاف پہلی ہی اننگز ڈیکلیئر کرنے والی پہلی ٹیم بن گئی، اس سے قبل ٹیسٹ کرکٹ کی 141سالہ تاریخ میں ایسا کبھی نہیں ہوسکاتھا۔

پاکستان نے پہلی اننگز میں 310 رنز بنائے جو کسی بھی ٹیم کی جانب سے اپنی پہلی ہی بولنگ اننگز میں دئیے گئے چوتھے زیادہ رنزہیں۔ اس بدترین ریکارڈ میں بھارتی ٹیم سب سے آگے ہے جس نے 1992 میں اپنی تاریخ کی پہلی ٹیسٹ اننگز کھیلنے والی زمبابوے کی ٹیم کو 429 رنزبنانے کا موقع دیا تھا۔
پاکستان ٹیم نے ڈبلن ٹیسٹ کے تیسرے روز شاداب خان، فہیم اشرف اور محمد عامر کے آﺅٹ ہوجانے کے بعد اننگز ڈیکلیئر کی تو پاکستان کا اسکور9 وکٹوں کے نقصان پر 310 رنز تھا۔

کیریئر کا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلنے والے آل راﺅنڈر فہیم اشرف 83 رنز بناکر پاکستانی اننگز کے ٹاپ سکورر رہے تھے جبکہ اسد شفیق نے 62 اور شاداب خان نے 55 رنزکی نمایاں اننگز کھیلیں۔

میچ کا نتیجہ کھیل کے آخری روز امام الحق اور بابر اعظم کی شاندار بیٹنگ کی بدولت پاکستان کے حق میں آیا۔ میچ میں آئرش ٹیم نے بھی خوب جم کر مقابلہ کیا اور پاکستان کو مشکلات سے دوچار رکھا۔

پاکستان آئرلینڈ کے خلاف میچ اور سیریز جیت کر 10 ٹیسٹ نیشنز کے خلاف کامیابی حاصل کرنے والا پہلا ملک بن گیا۔

loading...
loading...