فواد عالم کو منتخب نہ کرنے پر انضمام الحق تنقید کی زد میں

main

پاکستان کرکٹ بورڈ کی سلیکشن کمیٹی نے گزشتہ روز دورہ آئرلینڈ اور انگلینڈ کے لئے 16 رکنی اسکواڈ کا اعلان کیا ہے۔ تاہم فرسٹ کلاس کرکٹ میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے بائیں ہاتھ کے بلے باز فواد عالم کو ایک بار پھر نظر انداز کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق قومی ٹیم کے اعلان کے بعد سے سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے سلیکشن کمیٹی کے چیئرمین انضمام الحق کو تنقید کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔ سوشل میڈیا صارفین کا خیال ہے کہ فواد عالم اپنی صلاحیتوں سے ٹیم کی جیت میں اہم کردار ادا کرسکتے ہیں۔

کچھ صارفین نے انضمام الحق کے بھتیجے امام الحق کی سلیکشن پر اعتراضات اٹھائے تو کچھ فخر زمان کی ٹیسٹ میں سلیکشن پر بھی حیران نظر آئے۔ ساتھ ہی اب سوشل میڈیا پر ہیش ٹیگ جسٹس فار فواد کے نام سے بھی مہم چلائی جارہی ہے۔

اس کے علاوہ کچھ صارفین نے اپنی رائے کا اظہار کرتے ہوئے یہ لکھا کہ ہم کسی کے خلاف نہیں بس فواد عالم کے حق میں ہیں کیونکہ وہ ٹیم میں شامل ہونے کی اہلیت رکھتے ہیں۔

گزشتہ برس ویسٹ انڈیز کے خلاف کیریبیئن میں سیریز جیتنے کے بعد پاکستان کے سب سے کامیاب بلے باز یونس خان اور پاکستان کرکٹ کی تاریخ کے سب سے کامیاب کپتان مصباح الحق کرکٹ کو خیر باد کہہ گئے تھے۔ دونوں کی ریٹائرمنٹ کا اثر ہمیں امارات میں سری لنکا کے خلاف کھیلی جانے والی سیریز میں نظر آیا اور پاکستان نے یو اے ای میں پہلی بار نہ صرف ٹیسٹ سیریز ہاری بلکہ کلین سوئپ بھی ہوگئی۔

پاکستانی عوام کرکٹ سے بے حد محبت اور لگاؤ رکھتی ہے اور اس سے جڑے معاملات پر گہری نظر رکھتی ہے، اسی لئے عوام کا خیال ہے کہ فواد عالم مڈل آرڈر میں ٹیم کی کمان سنبھالنے کے لئے ایک بہترین انتخاب ثابت ہوسکتے ہیں اور ٹیم میں جگہ نہ ملنا ان کے ساتھ سراسر نہ انصافی ہے۔

نوٹ: اس مضمون سے آج میڈیا گروپ کا متفق ہونا ضروری نہیں یہ محض سوشل میڈیا پر جاری تبصروں کو مدنظر رکھتے ہوئے لکھا گیا ہے۔۔۔