کچھ لوگوں کی کلائی پر یہ لکیر کیوں ہوتی ہے؟

Untitled-1

ہمارے جسم میں کچھ چیزیں ایسی ہوتی ہیں جو بہت کم افراد کے حصے میں آتی ہیں. کلائی پر بننے والی لکیر ایسی ہی ایک چیز ہے جو دنیا میں صرف پانچ فیصد لوگوں میں نظر آتی ہے.

درحقیقت یہ مسلز ہمارے آباﺅ اجداد کا ‘ورثہ’ ہیں جو درختوں پر چڑھنے کے عادی تھے.

اگر آپ دیکھنا چاہتے ہیں کہ آپ میں یہ ہے یا نہیں تو اپنے ہاتھ کو کسی سپاٹ سطح پر رکھیں. اب اپنی چھوٹی انگلی کو انگوٹھے سے چھوئیں اور ہلکا سے اٹھائیں.

اگر آپ کو کلائی میں لکیر ابھری ہوئی نظرآئے تو آپ یقیناً کلائی کے اس لمبے مسل کے مالک ہیں. تاہم اگر ایسا نہیں ہوتا تو فکر مند مت ہوں، موجودہ طرز زندگی میں ہمارے لیے یہ کسی کام کا نہیں کیونکہ ہمیں درختوں پر چڑھنے کی ضرورت نہیں پڑتی.

طبی ماہرین کے مطابق اس مسل کے نہ ہونے سے کوئی فرد کمزور نہیں ہوتا۔ آج ہم اس کے بغیر ہی سخت گرفت کرسکتے ہیں. کہا جاتا ہے کہ انسانی جسم میں ارتقاء جاری رہا تو آئندہ کئی صدیوں بعد لوگوں کے ہاتھوں میں ایسا مسل کبھی سامنے نہیں آئے گا.

loading...
loading...