یوٹیوب کی گائیڈلائنز سخت ، پانچ لاکھ ویڈیوز ہٹادیں

File Photo

File Photo

یوٹیوب نے اپنے پلیٹ فارم سے اشتعال انگیز اور انتہا پسند مواد ہٹانے کیلئے اقدامات تیز کردیئے ۔ یوٹیوب نے دس ہزار افراد پلیٹ فارم پر اشتعال انگیز مواد کی مانیٹرنگ کرنے کیلئے نوکری پر رکھ لیے۔ یہ افراد بچوں کو نقصان یا بچوں کیلئے مضر سمجھے جانے والے مواد کی بھی نگرانی کریں گے۔

اپنے ایک انٹرویو میں گوگل کی چیف ایگزیکٹیو سوزان نے کہا بعض کردار اس پلیٹ فارم کو ڈرانے دھمکانے اور نقصان پہنچانے کے مقصد لئے اسکا استحصال کررہے ہیں۔

اپنے انٹرویو میں انہوں نے بتایا  اپنے پلیٹ فارم پر نشر ہونے والے مواد کو پالیسی کے مواد مزید ڈھالنے کیلئے اپنی ٹیم میں مزید دس ہزار افراد کا اضافہ کریگا۔

انہوں نے اس موقعے پر کمنٹس سیکشن کا بھی حوالہ دیا اور بتایا اب کمنٹس ماڈریشن کا نیا سسٹم متعارف کروایا جارہا ہے اور بعض صورت میں ان کو مکمل ہٹایا بھی جاسکتا ہے کیونکہ اب اس حوالے سے مزید سخت اقدامات کیے جارہے ہیں۔

یوٹیوب نے گزشتہ ہفتے ہی اپنا ایک نیا فیچر بھی متعارف کروایا ہے جس کے تحت استعمال کنندہ کو ریکمینڈیشن فیچرمیں اپنے مطلب کی ویڈیو بھی نظر آئیں گی۔

یوٹیوب اب تک پانچ لاکھ  سے زائد ویڈیوز اور پچاس یوٹیوب چینلز اپنی نئی پیش کردہ گائیڈلائنز کے تحت  بند کر چکا ہے۔

یوٹیوب کو پہلے ہی ریگولیٹرز اور پبلشرز کی جانب سے نشر ہونے والے مواد پر تنقید کا سامنا تھا۔

Courtesy: zeenews.com