جلد کی مدد سے آواز سننے والی ٹیکنالوجی تیار کرنے کا منصوبہ

فائل فوٹو

فائل فوٹو

فیس بک کی ترجمان رینا ڈیوگن نے بلڈنگ 8 ریسرچ گروپ کے دوران بتایا کہ فیس بک کان کے بجائے جِلد سے آوازوں کو سننے والی ٹیکنالوجی پر کام کر رہی ہے۔

فیس بک کے مطابق یہ ممکن ہے کہ کان کے سننے والے عمل کو ٹیکنالوجی کی شکل دے کر کسی فرد کی جلد کو اس کے قابل بنادیا جائے۔

یہ ٹیکنالوجی الفاظ کے ارتعاش کو محسوس کرے گی اور وقت کے ساتھ اسے سمجھنے کے قابل ہوجائے گی۔

فیس بک کے مطابق اس حوالے سے ایک بنیادی پروٹو ٹائپ سسٹم تیار کیا جاچکا ہے جو لوگوں کو مختلف آوازوں کے ارتعاش پر ردعمل میں مدد دیتا ہے۔

فیس بک کے عہدیداران کے مطابق بہت جلد ایسا ہوسکتا ہے کہ جیسے کوئی فرد چینی زبان میں سوچیں اور آپ فوری طور پر اسے اطالوی زبان میں سمجھ سکیں یا محسوس کرسکیں۔

ان کا کہنا تھا کہ تصور کریں دنیا کے کروڑوں افراد جو پڑھ یا لکھ نہیں سکتے مگر سوچ اور محسوس کرسکتے ہیں۔

فیس بک کے عہدیداران کا کہنا تھا کہ اس میں چند سال لگ سکتے ہیں۔

بشکریہ Mashable