مارشل لاء کو دعوت دینا آئین سے بغاوت ہے،فضل الرحمان

مولانا فضل الرحمان کی وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات - فائل فوٹو

مولانا فضل الرحمان کی وزیراعظم نواز شریف سے ملاقات – فائل فوٹو

جمعیت علماء اسلام پاکستان کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ مارشل لاء کو دعوت دینا آئین سے بغاوت ہے۔ غیر جمہوری قوتوں کو پھولنے پھلنے نہیں دیا جائے گا۔

جمیعت علماء اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے رائیونڈ میں وزیراعظم  نواز شریف سے ملاقات کی، ملاقات میں پاناما لیکس سے پیدا ہونے والی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔

ان کا کہنا تھا کہ اپوزیشن کی حکومت مخالف تحریک کا بھر پور جواب دینا چاہیئے۔معاملات کو سلجھانے کے لئے وہ اپنا سیاسی کردار ادا کرنے کو بھی تیار ہیں۔

ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمن نے کہا کہ پاناما لیکس ایک سازش ہے جس کا مقصد دنیا کو مسائل کا شکار کرنا ہے۔ اپوزیشن صرف پوائینٹ اسکورنگ کے لئے سیاسی ماحول کو گرمانا چاہتی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ نہتے کشمیریوں پر بھارتی مظالم کے خلاف پاکستان کا مضبوط رد عمل آنا چاہیئے۔

نہتے کشمیریوں پر بھارتی فوج کے مظالم سے متعلق سوال پر مولانا فضل الرحمن کا کہنا تھا کہ کشمیر ایشو پر پاکستان مظلوم کشمیری عوام کے ساتھ ہے۔ مسئلہ کشمیر کے حوالے سے ہر فورم پر احتجاج کیا جائے گا۔

مختلف شہروں میں آرمی چیف کے حوالے سے پوسٹر آویزاں کرنے کے معاملے پر جے یو آئی کے سربراہ کا کہنا تھا کہ ایسی حرکتیں عسکری ادارے کو متنازع بنانے کی کوشش ہے۔ دہشت گردی کے خلاف اقدامات پر آرمی چیف کی مقبولیت میں اضافہ ہوا ہے۔

loading...
loading...