ملک بھرمیں بھارت کایوم آزادی یوم سیاہ کے طور پرمنایا جارہا ہے

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد:ملک بھر میں بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طور پرمنایا جارہا ہے،وفاقی اور صوبائی دارالحکومتوں اہم عمارتوں پر قومی پرچم سرنگوں ہےجبکہ مختلف شہروں میں کشمیریوں سے اظہاریکجہتی کیلئے ریلیاں نکالی جارہی ہیں۔

کشمیر بنے گا پاکستان!پاکستانی عوام کشمیریوں کی آواز میں ہم آوازہیں،ملک بھر میں بھارت کے یوم آزادی پریوم سیاہ   منایا جارہا ہے،جگہ جگہ جلسے جلوس اور احتجاجی ریلیاں نکالی جارہی ہیں،کشمیری عوام کا ساتھ دینے کے عزم کا اظہارکیا جارہا ہے۔

اسلام اباد میں ایوان صدر، پارلیمنٹ ہاؤس ،وفاقی سیکرٹریٹ سمیر سرکاری عمارتوں پرقومی پرچن سرنگوں ہے،بھارتی ہائی کمیشن کے قریب دفتر خارجہ کے سامنےاحتجاجی مظاہرے کیا گیا۔

لاہور سمیت پنجاب بھر میں آج سرکاری سطح پریوم سیاہ منایا جارہا ہے،پنجاب اسمبلی، واپڈا ہاؤس، گورنر ہاؤس، سول سیکرٹریٹ ،ٹاؤن ہال سمیت تمام سرکاری عمارتوں پر سیاہ پرچموں کےساتھ کشمیر کے پرچم بھی لہرائے جارہے ہیں۔

کشمیریوں سے اظہار یکجہتی اور بھارتی فوج کے مظالم کیخلاف شہروں،دیہات اورگلی محلوں میں احتجاجی مظاہرےکئے جائیں گے،گورنرپنجاب چوہدری سروراوروزیراعلیٰ پنجاب  عثمان بزدار کی قیادت میں مال روڈ پرریلی نکالی جائے گی۔

کراچی میں بھی اہم سرکاری عمارتوں پر قومی پرچم سرنگوں ہے،کراچی میں مختلف مقامات پر ریلیوں اور احتجاج کا اہتمام کیاگیا ہے ۔

پشاور سمیت خیبرپختونخوا میں آج یوم سیاہ منایا جارہا ہے،پشاور ہائیکورٹ، خیبرپختونخوا اسمبلی کی عمارتوں پر پاکستانی پرچم سرنگوں ہے،چمکنی میں تاجروں کی جانب سے احتجاجی ریلی نکالی جائے گی۔

وزیراعظم کی معاون خصوصی اطلاعات فردوس عاشق اعوان ریلی سے خطاب کریں گی۔

کوئٹہ سمیت بلوچستان بھر میں اہم سرکاری عمارتوں پرسیاہ پرچم نصب کئے گئےہیں،بلوچستان بھر میں بھارت کیخلاف احتجاجی مظاہرے کئے جائیں گے۔

پنجاب حکومت نے صوبے کے تمام کمشنرز اور 36 اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز، سرکاری اداروں کے سربراہان کے نام باقاعدہ سرکلر جاری کیا ہے جس میں یہ حکم دیا گیا ہے کہ ریلیوں میں شریک تمام افراد بطور احتجاج بازوؤں پر سیاہ پٹیاں باندھیں۔

ریلیوں میں پاکستان اور آزاد کشمیر کے پرچم لہرائے جائیں گے، سرکلر میں پنجاب بھر میں سرکاری، پرائیویٹ عمارتوں، گھروں، کمرشل پراپرٹیز، پلازوں پر پاکستان اور آزاد کشمیر کے پرچم لہرانے کے ساتھ بھارتی ظلم کیخلاف سیاہ پرچم لہرانے کی بھی ہدایات جاری کی گئی ہیں،پنجاب کے ہرشہر میں بڑی احتجاجی ریلیاں نکالنے کے احکامات بھی دیئےگئے ہیں۔

پنجاب بھر کے ڈپٹی کمشنرز، پولیس افسران کو سخت ہدایات جاری کی گئی ہیں کہ ان تمام ریلیوں کیلئے فول پروف انتظامات کئے جائیں، اپوزیشن جماعتوں نے بھی یوم سیاہ کی تقریبات کو حتمی شکل دیدی ہے۔

 

مسلم لیگ (ن) کشمیری عوام سے اظہار یکجہتی کیلئے یوم سیاہ پر آزاد کشمیر میں جلسہ کرے گی جبکہ حریت کانفرنس کی جانب سے بھارتی ہائی کمیشن کی جانب احتجاجی مظاہر ہ کیا جائے گا اورراولپنڈی میں طلبہ ریلی نکالیں گے۔

loading...
loading...