ملکی معیشت یوٹرن سے نہیں کام کرنے سے مستحکم ہوتی ہے، نوازشریف

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد:سابق وزیراعظم نوازشریف کا کہنا ہے کہ ملکی معیشت یوٹرن سے نہیں سچ بولنے اورکام کرنے سے مستحکم ہوتی ہے۔

جمعے کو سابق وزیراعظم نے احتساب عدالت میں صحافیوں سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ 2013 سے 2017تک دنیا ہماری معیشت کومضبوط اورمتوازن کہتی تھی ،جب گھر بھیجا گیا تب دہشتگردی ختم ہو گئی تھی ،سی این جی اسٹیشن پرقطاریں نہیں لگتی تھیں۔

نوازشریف کا مزید کہنا تھا کہ ملکی معیشت یوٹرن سے نہیں سچ بولنے اورکام کرنے سے مستحکم ہوتی ہے۔

انہوں نے کہاکہ ان کے دورمیں ڈالرکے مقابلے میں روپے کی قدرمیں توازن رہا ، ڈالر کی قدر ان سے پوچھے بغیر10پیسے بھی اوپر نہیں جاتی تھی اور وزیراعظم کی منظوری کے بغیریہ ہونا بھی نہیں چاہیے۔

سابق وزیراعظم نے مزید کہاکہ شہبازشریف نے  پہلی بارکراچی سے انتخابات میں حصہ لیا تحریک انصاف کے امیدوار کچھ 100 ووٹ سے جیتے اوراس کی جیت بھی سب کوپتہ ہے تحریک انصاف کی جیت کے حوالے سے فافن رپورٹ دیکھ لیں۔

loading...
loading...