چیف جسٹس نے ڈبوں میں ملنے والے دودھ کو فراڈ قرار دیدیا

فائل فوٹو

فائل فوٹو

رکاچی:چیف جسٹس آف پاکستان میاں  ثاقب نثار نے ڈبوں میں ملنے والے دودھ کو فراڈ قرار دےدیا۔ سندھ ہائیکورٹ کے ناظر کو دودھ کی پی سی ایس آئی آر سے فوری جانچ کراکر رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کردی۔

کراچی رجسٹری میں پیکٹ والے دودھ کی فروخت سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ ہم عوام کے ساتھ زیادتی بالکل نہیں ہونے دیں گے۔

انہوں نے دودھ کا ٹیسٹ کرا کے رپورٹ پیش کرنے کا بھی حکم دیا۔

جسٹس ثاقب نثار نے پنجاب کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ پنجاب میں دودھ سے یوریا بالصفا پاؤڈر نکال دیا گیا ہے۔

درخواست گزار وکیل دیگر وکلا کےساتھ ایک ٹیم بنائیں اور تمام کمپنیز کے دودھ کی جانچ کراکر رپورٹ دیں۔

عدالت نے دودھ فروخت کرنےوالی کمپنیز کو ہدایات بھی دیں کہ وہ ڈبوں پر لکھیں کہ یہ دودھ نہیں ہے۔

loading...
loading...