پاکستان نے سِکھ یاتریوں سے نہ ملانے کے بھارتی الزامات کو مسترد کردیا

فائل فوٹو

فائل فوٹو

پاکستان نے بھارتی ہائی کمشنر کو پاکستان کے دورے پر آئے سکھ یاتریوں سے نہ ملنے کے بھارتی الزامات کو مسترد کر دیا ہے۔

 بھارتی وزارت خارجہ کی طرف سے جاری کئے گئے بیان کے جواب میں دفتر خارجہ نے بھارت کے ان بے بنیاد اور جھوٹے الزامات کو مسترد کر دیا ہے جن میں کہا گیا ہے کہ اسلام آباد میں بھارتی ہائی کمشنر کو پاکستان کے دورے پر آئے سکھ یاتریوں سے ملنے نہیں دیا گیا۔

ترجمان نے کہاکہ حقیقت یہ ہے کہ پاکستان نے بھارتی ہائی کمشنر کو گوردوارہ پنجہ صاحب میں گذشتہ روز ہونے والی بیساکھی کی مرکزی تقریب میں شرکت کی دعوت دی تھی۔

وزارت خارجہ نے جمعہ کو بروقت دعوت نامہ بھیجا تھا اور سفری اجازت دی تھی۔ تاہم مرکزی تقریب سے قبل متروکہ وقف املاک بورڈ کے حکام نے وہاں سکھ یاتریوں میں سے زیادہ تر میں بھارت میں باباگرونانک دیوجی کے بارے میں ریلیز ہونے والی فلم کے حوالے سے سخت غم و غصہ محسوس کیا۔ شدید جذباتی ماحول اور کسی قسم کی ناخوشگوار صورتحال پیدا ہونے کا ادراک کرتے ہوئے پاکستانی حکام نے بھارتی ہائی کمیشن کے افسران سے رابطہ کیا اور دورے کی منسوخی کی تجویز دی۔

جس کےبعد بھارتی ہائی کمیشن کے حکام نے بھرپور مشاورت کے بعد صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے دورہ منسوخ کر دیا۔