وائیلیشن اگینسٹ وومن: پنجاب بھر سے 10ہزار سے زائد کیسز سامنےآگئے

فائل فوٹو

فائل فوٹو

لاہور:صوبہ پنجاب میں گزشتہ سال وائیلیشن اگینسٹ وومن کے10ہزار سے زائد  کیسز سامنے آگئے، جن میں سب سے زیادہ  لاہور میں ایک ہزار کیسز رپورٹ ہوئے۔

پنجاب کمیشن برائے  حقوق خواتین کےاعدادوں شمار کےمطابق پنجاب کے36اضلاع میں غیرت کےنام پر222 کوقتل کیا گیا جن میں 13 خواتین کا تعلق لاہور سے تھا۔

رپورٹ کےمطابق پنجاب میں زیادتی کانشانہ بننےوالی خواتین کی تعداد3378ہیں جن میں صرف لاہور میں 287 خواتین زیادتی کا شکار ہوئیں۔

پنجاب میں36خواتین تیزاب گردی کانشانہ بنیں جس میں لاہورسےتعلق رکھنے والی5خواتین بھی شامل ہیں۔

پنجاب کمیشن برائےحقوق خواتین کی چیئرپرسن فوزیہ وقار کا کہنا ہے کہ خواتین کوان کےحقوق کے بارے  میں آگاہی ہونا ضروری ہے۔

رپورٹ میں مزیددل دہلا دینےوالےانکشافات میں خواتین پر گھریلو تشدد،ہراساں کرنا جبکہ مارپیٹ،چوٹ پہچانےاورحملہ کرنےکے4590کیسز رجسٹرڈ ہوئے ہیں۔

loading...
loading...