سپریم کورٹ کاسندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کی کارکردگی پرسخت برہمی کااظہار

سپریم کورٹ آف پاکستان کراچی رجسٹری-فائل فوٹو

سپریم کورٹ آف پاکستان کراچی رجسٹری-فائل فوٹو

کراچی:لیاری متروکہ املاک بلڈنگ کیس میں سپریم کورٹ نےچیف سیکریٹری کو عمارت خالی کرانے کیلئے ٹھوس اقدامات  کا حکم دے دیا۔

لیاری میں متروکہ املاک کی بلڈنگ پر قبضے کے مقدمے میں سپریم کورٹ نے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی اور دیگر اداروں  کی کارکردگی پر سخت برہمی کا اظہارکیا۔

جسٹس سجاد علی شاہ نے کہا کہ کراچی کو ناسور بنادیا ہے۔اگر ایس بی سی اے ناکارہ ہے تو یہ ادارہ ختم کردیں۔قبضوں اور غیرقانونی تعمیرات پر کوئی پوچھنے والا نہیں۔

جسٹس گلزار احمد نے ریمارکس دیے کہ قبضوں کا یہی حال رہا تو کل سندھ اسمبلی، سپریم کورٹ اور سندھ ہائیکورٹ پر بھی قبضہ ہوجائے گا۔ سندھ بلڈنگ اتھارٹی کے افسران غیرقانونی تعمیرات پر آنکھیں بند کرلیتے ہیں۔

ایڈیشنل  ایڈوکیٹ جنرل نے عدالت کو بتایا کہ لیاری میں امن و امان کا مسئلہ ہے اس لیے کارروائی نہیں کررہے۔عدالت کے حکم پر ٹھیکیدار کو گرفتار کیا مگر ہائیکورٹ سے ضمانت مل گئی۔

عدالت نے چیف سیکریٹری کو عمارت خالی کرانے کیلئے ٹھوس اقدامات کا حکم دیا ساتھ ہی یہ بھی کہا کہ اگر مکینوں کو معاوضہ دینا پڑے تو دیں مگر عمارت خالی کرکے رپورٹ پیش کریں۔

پولیس نے جعلسازی اور عمارت پر  قبضے میں ملوث ملزم شنکر لعل کو احاطہ عدالت سے گرفتار کرلیا۔

loading...
loading...