انسداد دہشت گردی پر سیاست نہیں ہونی چاہیئے، چوہدری نثار

File Photo

File Photo

اسلام آباد: وزیرداخلہ چوہدری نثارنے کہاکہ آپریشن ضرب عضب کے بعد پاکستان میں کوئی دہشت گرد تنظیم نہیں بلکہ دہشت گردی کی کارروائیاں انفرادی طور پر ہوتی ہیں۔ انسداد دہشت گردی کے معاملے پر سیاست نہیں ہونی چاہئے ، فرقہ پرستوں کیخلاف بھی گھیرا تنگ ہونا چاہئے۔

وزیرداخلہ چوہدری نثار علی خان نے سینیٹ میں سیاسی مخالفین کو کھری کھری سنائی اور دعوٰی بھی کردیا کہ پاکستان میں کوئی دہشت گردی تنظیمی سطح پر نہیں ہوتی بلکہ یہ انفرادی عمل ہے۔

کالعدم تنظیم کے رہنماؤں سے ملاقات کے الزام پرچوہدری نثارنےکہا کہ ملاقات غیرارادی تھی۔ ماضی میں بھی حکمرانوں سے یہ لوگ ملتے رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سندھ اور خیبرپختونخوا حکومت نے ان پر الزامات لگائے، دہشت گردی کے معاملے پر سیاست نہیں ہونی چاہئے بلکہ دہشت گردوں اورفرقہ پرستوں کے خلاف گھیرا تنگ ہونا چاہیے ۔

وزیرداخلہ نے کہا کہ کراچی کے حالات بہترکرنے میں سب نے ملکرکام کیا، سہرا سب کے سر جاتا ہے ۔ مشترکہ کارروائی کے بغیرکامیابی مشکل ہوتی ہے ۔