خواتین کی تعریف کرتے وقت یہ الفاظ کبھی نہ بولیں ورنہ۔۔۔

Untitled-1

خواتین کو اپنی تعریف سننا اچھا لگتا ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ آپ خواتین کی تعریف کرتے ہوئے ان باریک باتوں کو نظر انداز کر دیں جن کی وجہ سے آپ کی باتوں کا غلط مطلب لے لیا جائے۔

آپ کی سہولت کیلئے ذیل میں وہ کلمات دیئے جارہے ہیں جنہیں بطور تعریف ادا کرنے سے گریز کرنا ہی بہتر ہے۔

٭ کم عمر

بھر پور جوانی کی عمر میں قدم رکھ چکنے والی خواتین کو یہ مت کہیں کہ وہ ‘کم عمر نظر آرہی ہیں’۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ 20 سال یا اس سے کچھ زائد عمر کی خواتین کیلئے یہ بات خوش کن ہے کہ وہ مکمل عورت بن چکی ہیں، کم عمری کو وہ نامکمل نسوانی حسن کی طرف اشارہ سمجھتی ہیں۔

٭ مسکراہٹ

‘آپ مسکراتی ہوئی بہت خوبصورت لگتی ہیں’۔۔۔ یہ وہ تعریف ہے جو خواتین کو یہ سوچنے پر مجبور کر دیتی ہے کہ آیا وہ ویسے خوبصورت نہیں ہیں۔ خواتین سوچتی ہیں کہ انہیں خوبصورت نظر آنے کیلئے مسکراہٹ کے سہارے کی ضرورت ہے اور انہیں ایک کٹھ پتلی کی طرح مصنوعی مسکراہٹ دکھانی پڑے گی۔

٭ شخصیت

یہ کہنا کہ  ‘مجھے آپ کی شخصیت پسند ہے’ کا کچھ خاص فائدہ نہیں کیونکہ خواتین یہ سننا زیادہ پسند کرتی ہیں کہ وہ بہت دلکش ہیں، ان کی آنکھیں مسحور کن ہیں اور زلفوں کی خوبصورتی بے مثال ہے۔ اگر آپ کسی نوجوان خاتون کو یہ بتائیں کہ وہ مختلف قسم کی خاتون ہے تو اس کا مطلب یہ لیا جاسکتا ہے کہ آپ کے خیال میں یہ سب خواتین فارغ ہیں اور آپ کا بیان مصنوعی اور عارضی نوعیت کا ہے۔

٭ بھولا پن یا معصومیت

‘آپ بہت بھولی بھالی اور معصوم ہیں’۔۔۔ اس تعریف کا مطلب یہ ہے کہ آپ خاتون کی فہم و دانش بصیرت اور تجربات کو اہمیت نہیں دے رہے۔ خواتین ذہین اور ذی فہم کہلانا پسند کرتی ہیں۔

٭ دلچسپ

۔آپ زندگی میں رنگ بھرنا جانتی ہیں’۔۔۔ اس قسم کی تعریف کا باآسانی یہ مطلب لیا جاسکتا ہے کہ آپ خاتون کو محض تفریح کا ذریعہ سمجھتے ہیں اور مقصد صرف لذت ہے۔

٭ ذہانت

اگر آپ یہ کہیں کہ ‘تم لڑکی ہو کر اتنی اسمارٹ ہو یقین نہیں ہوتا’ تو ایک پڑھی لکھی لڑکی یا عورت صنفی امتیاز قرار دے سکتی ہے۔

٭ صحت

یہ بھی یاد رکھیں کہ خواتین اپنے وزن کے بارے میں بہت حساس واقع ہوئی ہیں اگر آپ تعریف میں یہ کہتے ہیں کہ ‘آپ بہت صحت مند نظر آرہی ہیں’ تو ان کے کان میں یہ سنائی دے گا کہ آپ کافی موٹی نظر آرہی ہیں لہٰذا خواتین کی صحت کی تعریف کرتے ہوئے بھی خصوصی احتیاط سے کام لیں۔

loading...
loading...