پھٹی ایڑھیوں سے چھٹکارا پائیں یہ گھریلو نسخے آزمائیں

1383224_1437738110

خشک اور پھٹی ایڑھیاں آپ کے پیروں کی خوبصورتی کو برباد کر دیتی ہیں۔ گرمیوں میں عموماً آپ کھلے جوتے یا سینڈلز وغیرہ پہننے کو ترجیح دیتے ہیں تو ایسے میں آپکی ایڑھیوں پر  گرد اور دھول وغیرہ جم جاتی ہے جو کہ باقائدہ صفائی اور موسچرائزنگ نہ ہونے کی وجہ سے پھر پھٹ جاتی ہیں اور پیروں کی جلد کی نمی بھی ختم ہوجاتی ہے۔

پھٹی اور خشک ایڑھیوں کی وجہ آپ کا بڑھتا ہوا وزن بھی ہو سکتا ہے۔ چونکہ آپ کے پاؤں آپ کے جسم کا سارا وزن اپنے اوپر لے لیتے ہیں تو اس لئے بھی آپ کے پیروں کو آرام اور توجہ نہ ملنے کی صورت میں آپ کے پیر خشک ہو جاتے ہیں ۔ حد سے زیادہ ٹھنڈک اور حد سے زیادہ گرمی بھی آپ کے پیروں کے لئے نقصان دہ ہے۔

غلط انداز میں چلنے والے لوگ ذیابطیس کے مریض اور جلدی امراض سے متاثرہ لوگوں کے لئے ان کے پیروں کی خشک جلد ان کے لئے بے شمار مشکلات کا باعث بنتی ہیں۔

بعض اوقات پیروں کی پھٹی ہوئی خشک ایڑھیوں کے بے تحاشہ درد کی وجہ سے ایڑھیوں سے خون بھی رسنے لگتا ہے جو کہ کسی بھی انسان کے لئے نا قابل برداشت ہے۔ تو اس کے لئے سب سے بہتر بات یہ ہے کہ آپ فوراً کسی جلدی امراض کے ماہر کے پاس جائیں اور اپنا تسلی بخش معائنہ کروائیں۔

لیکن اگر معاملہ صرف پھٹی ہوئی خشک جلد کا ہے تو آپ گھر بیٹھے بھی  مختلف نسخوں پر عمل کر کے اپنے پیروں کو خوبصورت بنا سکتے ہیں ۔

پیروں کی خشکی اور پھٹی ایڑھیوں کے لئے چند بہترین گھریلو ٹوٹکے درج زیل ہیں۔

اگر آپ کسی رتیلے یا ابر آلوگ علاقے میں جارہے ہیں تو ایسے جوتوں کا استعمال کریں جن میں ریت یا مٹی گزرنے نہ پائے۔ اور آپ کی ایڑھیوں اور جلد محفوظ رہے۔

گھر میں چلتے ہوئے آرام دہ جوتوں کا انتخاب کریں۔

اپنے پاؤں نیم گرم پانی میں بھگو کر رکھیں اور اسکریپر کی مدد سے غیر ضروری جلد اتار لیں۔

باقائدگی کے ساتھ پیڈی کیور کروائی یا گھر میں ہی  خود کریں۔

اس کے علاوہ آپ پانی اور دودھ شامل کر کے اس پانی میں پاؤں بھگوئیں اور بادام کے تیل میں تین کھانے کے چمچ نمک ملا کر ایک اسکرب تیار کریں اور اسے اپنے پاؤں پر ملیں اس سے تما م گرد و دھول آپ کے پاؤں سے صاف ہو جائے گی۔

نوٹ : یہ مضمون محض عام معلومات ہے لئے ہے۔