دہشت گردوں کے خلاف کارروائی میں کالعدم تنظیم کے کمانڈر سمیت چونتیس دہشت گرد مارے گئے،سرفراز بگٹی

sarfaraz
کوئٹہ:قلات میں دہشت گردوں کے خلاف کارروائی میں کالعدم تنظیم کے کمانڈر عبدالنبی بنگلزئی سمیت چونتیس دہشت گرد مارے گئے، آپریشن کے دوران ایک اہلکار بھی شہید ہو گیا۔

کوئٹہ میں وزیرداخلہ بلوچستان سرفراز بگٹی اور بلوچستان حکومت کے ترجمان انوارالحق کاکٹر نے میڈیا کو قلات آپریشن پر بریفنگ دی۔ سرفراز بگٹی کا کہنا تھا کہ قلات میں انٹیلی جنس بیسڈ آپریشن تین روز تک جاری رہا جس میں بڑی کامیابی حاصل ہوئی۔انہوں نے بتایا کہ آپریشن کے دوران کالعدم بی ایل اے کے کمانڈر عبدالنبی بنگلزئی سمیت چونتیس دہشت گرد مارے گئے،بھاری تعدار میں گولہ بارود اور اسلحہ بھی برآمد کر لیا گیا۔

وزیر داخلہ بلوچستان کے مطابق دہشت گرد مستونگ میں مسافروں کے قتل،کوئٹہ میں سو سے زائد افراد کی ٹارگٹ کلنگ،درجنوں بم دھماکوں اور چیف جسٹس بلوچستان نوازمری کے قتل میں بھی ملوث تھے۔

سرفراز بگٹی کا کہنا تھا کہ غیر ملکی ایجنسیاں پاکستان کا امن تباہ کرنا چاہتی ہیں،لیکن فورسز دشمن کو منہ توڑ جواب دے رہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ کلبھوش بلوچستان میں تخریبی سرگرمیوں کا مرکزی کردار تھا،اس کی گرفتاری کے بعد بلوچستان سے را کا نیٹ ورک ختم ہو رہا ہے۔

بلوچستان میں جاری ڈاکٹروں کی ہڑتال پر سرفراز بگٹی کا کہنا تھا کہ معاملہ جلد افہام و تفہیم سے حل کرلیا جائے گا۔

loading...
loading...