شہباز شریف کی نواز شریف سے ملاقاتوں پرپابندی کی شدید مذمت

 فائل فوٹو

فائل فوٹو

لاہور:قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈرشہبازشریف نے سابق وزیراعظم نوازشریف سے ملاقاتوں پر پابندی کی شدید مذمت  کی اور اسے فسطائی سوچ قرار دےدیا۔

مسلم لیگ (ن)کے صدر شہبازشریف نے اپنے بیان میں کہاکہ نوازشریف سےملاقاتوں پرپابندی فسطائی سوچ ہے،نوازشریف کےساتھی فسطائی سوچ کاڈٹ کرمقابلہ کریں گے۔

شہباز شریف نے کہا کہ عمران نیازی جتنا بھی ظلم کریں،قوم پربجٹ کا ظلم نہیں چلنے دیں گے،3بارمنتخب اورعوام کو ریلیف دینے والے وزیراعظم سے سلیکٹڈ وزیراعظم خوفزدہ ہے،خان صاحب کےسرپربجٹ منظورنہ ہونےکاخوف سوارہے۔

شہباز شریف نے کہا کہ ذاتی معالج کی ملاقات سے روکنا اورمعلومات نہ فراہم کرنا انتہائی افسوسناک ہے ،پنجاب حکومت تو کٹھ پتلی ہے، عمران نیازی کے اشاروں پریہ سب کیاجارہا ہے۔

دوسری جانب  معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے ٹوئٹرپرجواب دیتے ہوئے کہاکہ شہباز شریف کنفیوژن کا شکارہیں وہ مفاہمت کی بات کرتے ہیں توان کے اپنے سیاسی انتہاء پسند ان کے پاؤں کی زنجیربن جاتے ہیں ۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ شہبازشریف کی ذہنی کشمکش کا ثبوت ان کا خطاب ہےجس میں ایک جانب میثاق معیشت کی پیشکش تو دوسری طرف حکومت نہ چلنے دینے کی جذباتی دھمکی دیتے ہیں ۔

انہوں نے مزید کہاکہ شہبازشریف کو سمجھ نہیں آرہی کہ وہ جیل میں اپنے بھائی  سے لائن لیں یا پھر اپنے دل کی سنیں؟ ،نااہل لیگ کا کوئی بیانیہ نہیں، صرف اور صرف ذاتی کاروباری مفادات ہیں۔

loading...
loading...