پی پی کارکنوں سے ذلت آمیز رویہ غیر اخلاقی عمل ہے،فضل الرحمان

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد:جمعیت علمائے اسلام (ف )کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کا کہنا ہے پیپلز پارٹی کے رہنماؤں اور کارکنوں کے ساتھ ذلت آمیز رویہ اختیار کیاگیا یہ غیر جمہوری اور غیر اخلاقی عمل ہے۔

پیپلزپارٹی کارکنوں کیخلاف اسلام آباد میں کریک ڈاؤن پر مولانا فضل الرحمان بھی میدان میں آگئے۔

 مولانا فضل الرحمان کا پیپلز پارٹی کے کارکنوں پر تشدد پر ردعمل دیتے ہوئے اپنے ایک ویڈیو پیغام میں کہنا تھا سیاسی کارکنوں پر تشدد اس بات کی علامت ہے کہ حکمرانوں کے حوصلے جواب دے چکے ہیں، حکمران اب سیاسی کارکنوں کو احتجاج کرنے کا آئینی حق استعمال کرنے کی بھی اجازت نہیں دیتے۔

فضل الرحمان نے کہا کہ انہوں نے خود تو ڈی چوک پر 120 دن کا دھرنا دیا پورا ملک جام کیا اور بین الاقوامی سرمایہ کاری کا راستہ روک دیا۔

ان کا مزید کہنا تھا جس طرح پیپلز پارٹی کے اہم رہنماؤں اور کارکنوں کے ساتھ ذلت آمیز رویہ اختیار کیاگیا یہ غیر جمہوری اور غیر اخلاقی عمل ہے،رمضان شریف میں مخالفین کے ساتھ اس طرح کا رویہ رکھنا جعلی حکومت کی علامت تو ہوسکتی ہے کسی جمہوری حکومت کی نہیں۔

انہوں نے کہا کہ حکمرانوں کے اسی طرح کے اقدامات سے ہی اپوزیشن کی احتجاجی تحریک کی فضا بنتی ہے، اس طرح کے اقدامات سے ناراضگی بڑھتی ہے۔

مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا ہم نے ملین مارچ کئے ہیں، لاکھوں لوگ آتے ہیں لیکن ایک شیشہ تک نہیں ٹوٹتا تاہم اسلام آباد میں پیپلز پارٹی کے سیاسی کارکنوں کے ساتھ کیا گیا یہ غیرجمہوری حکومت کی علامت ہے۔

loading...
loading...