شاعرحبیب جالب کی26ویں برسی آج منائی جارہی ہے

فائل فوٹو

فائل فوٹو

کراچی :اردو ادب کے انقلابی شاعرحبیب جالب کی26ویں برسی آج منائی جارہی ہے۔

  اٹھائیس فروری 1928 کو متحدہ ہندوستان کے ضلع ہوشیار پور کے ایک متوسط گھرانے میں آنکھ کھولنے والے انقلابی شاعر حبیب جالب نے زندگی کے ابتدائی اوائل سے ہی شاعری کا آغاز کیا،تقسیم ہند کے بعد وہ کراچی آگئے اور سیاسی جدوجہد میں حصہ لیا۔

یہی وہ دور تھا جب انہوں نے معاشرتی نا انصافیوں کو انتہائی قریب سے دیکھا جو بعد ازاں ان کی  نظموں کا موضوع بن گئیں جبکہ ان کا پہلا مجموعہ کلام برگ آوارہ کے نام سے 1957 میں شائع ہوا۔

  انہوں نے اپنے مشاہدات کو نتائج کی پرواہ کیے بغیر اشعار کے ذریعے پیش کیا۔

حبیب جالب نے جنرل ایوب اور پھر جنرل ضیاالحق کے دور آمریت میں کئ مقدمات میں  قید و بند کی صعبتیں بھی برداشت کیں۔

  وقت کے حکمرانوں کو اپنی شاعری سے للکارنے والے حبیب جالب کو دنیا سے گزرے آج 26برس بیت گئے لیکن ان کی انقلابی شاعری آج بھی زبان زد عام ہے۔

loading...
loading...