العزیزیہ ریفرنس:نواز شریف کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کیلئے درخواست دائر

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد:العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کیلئے اسلام آباد ہائیکورٹ میں درخواست دائر کردی ۔

ہفتے کو احتساب عدالت اسلام آباد سے العزیزیہ ریفرنس میں سزا پانے والے نوازشریف نے طبی بنیادوں پرضمانت کیلئے اسلام آباد ہائیکورٹ سے رجوع کر لیا،سابق وزیراعظم کے وکیل خواجہ حارث کی جانب سے درخواست دائر کی گئی۔

خواجہ حارث نے درخواست ضمانت میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ نواز شریف کو گزشتہ کئی دنوں سے عارضہ قلب لاحق ہے، ان  کی 3ہارٹ سرجریز  ہوچکی ہیں،میڈیکل بورڈ نے بھی نواز شریف کو اسپتال منتقل کرنا تجویز کیاہے۔

درخواست میں استدعا کی گئی کہ سزا کیخلاف زیر سماعت اپیل کے فیصلے تک احتساب عدالت کا فیصلہ معطل کیا جائے اور العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں سزا معطل کرکے  ضمانت پر رہا کیا جائے،نواز شریف کو کو طبی بنیادوں پر ضمانتی مچلکوں کے عوض رہا کیا جائے۔

درخواست کے ساتھ اسپیشل میڈیکل بورڈ کی 17 جنوری کی رپورٹ بھی لگائی گئی ،جس میں چیئرمین نیب، جج احتساب عدالت اور سپرنٹنڈنٹ کوٹ لکھپت جیل لاہور کو بھی فریق بنایا گیا ہے ۔

نواز شریف کی مرکزی اپیل اور سزا معطل کرنے کی درخواست ہائیکورٹ نے 18فروری کیلئے مقرر کر رکھی ہے۔

؎واضح رہے کہ سابق وزیراعظم نواز شریف نے العزیزیہ ریفرنس میں احتساب عدالت سے ملنے والی 7 سال قید کی سزا کو معطل کرنے کیلئے اسلام آباد ہائیکورٹ سے رجوع کر رکھا ہے، جس کی سماعت 18 فروری کو ہوگی۔

loading...
loading...