کلثوم نواز وفاشعار بیوی اور سمجھدار سیاسی رہنما، رپورٹ

nawazimage

 

بیگم کلثوم نواز اب صرف یادوں میں زندہ ہیں۔انھوں نے ایک وفا شعار بیوی اورسمجھدارسیاسی رہنما کے طور پرزندگی گزاری۔

 سابق وزیراعظم نواز شریف کی اہلیہ اور تین مرتبہ پاکستان کی خاتون اول رہیں ۔کلثوم نواز 1950 کو پیدا ہوئیں، ان کا تعلق کشمیری گھرانے سے تھا اور وہ گاما پہلوان کی نواسی تھیں۔

کلثوم نواز  نے ابتدائی تعلیم مدرسہ البنات سے حاصل کی اس کے بعد لیڈی گریفن اسکول سے میٹرک کیا، ایف ایس سی اسلامیہ کالج جب کہ بی ایس سی ایف سی کالج لاہور سے کی۔ آپ نے ایم اے پنجاب یو نیورسٹی سے کیا اور اسی دوران سابق وزیراعظم نواز شریف سے ان کی منگنی ہوگئی۔

کلثوم نواز کو عملی سیاست سے دلچسپی نہیں تھی اور وہ خاتون خانہ ہونے کو ترجیح دیتی رہیں۔1999 میں جب نواز شریف کو جیل جانا پڑا، تو ان کی رہائی کی مہم چلانے کے لئے کلثوم نواز سیاسی میدان میں سرگرم ہوئیں۔

بائیس جون 2000 میں انہیں مسلم لیگ ن کی قائم مقام صدر بنا دیا گیا اور وہ دو سال تک پارٹی کی صدارت کرتی رہیں۔اس دوران ایک موقع ایسا بھی آیا جب انہیں گرفتار اور نظر بند بھی کیا گیا ۔

نواز شریف کی گرفتاری کے خلاف انہوں نے کاروان تحفظ پاکستان ریلی نکالنے کا فیصلہ کیا، جس کی بناء پر انہیں 8 جولائی 2000 کو نظر بند کر دیا گیا۔ ۔

سترہ اگست 2017 میں کلثوم نواز بیماری کے باعث لندن منتقل ہوگئیں۔ 22 اگست 2017 کو ان میں کیسنر کی تشخیص کی گئی ۔ 11 ستمبر بروز منگل کلثوم نواز لندن میں  خالق حقیقی سے جاملیں۔

loading...
loading...