پی آئی اےکی مجوزہ نجکاری کیخلاف ملک بھرمیں احتجاج

pia10000000000

اسلام آباد:پی آئی اے کی مجوزہ نجکاری کیخلاف ملک بھر میں ملازمین کا احتجاج جاری ہے، نجکاری کمیشن کے سربراہ محمد زبیر اور جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے چیئرمین سہیل بلوچ کا ٹیلیفون پر رابطہ ہوا ہے، آج مذاکرات کا آغاز ہو سکتا ہے تاہم جیک پائی کا کہنا ہے کہ مطالبات سے ایک انچ پیچھے نہیں ہٹیں گے۔

حکومت اور پی آئی اے ملازمین کے درمیان مذاکرات پر ڈیڈ لاک ٹوٹنے کا امکان پیدا ہو گیا،ذرائع کا کہنا ہے کہ چئیرمین نجکاری کمیشن محمد زبیر اور جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے سہیل بلوچ کا رابطہ ہوا ہے جس کے بعد آج مذاکرات کے آغاز کا امکان ہے،جوائنٹ ایکشن کمیٹی کا کہنا ہے کہ پیش کردہ مطالبات سے ایک انچ بھی پیچھے نہیں ہٹیں گے۔

مجوزہ نجکاری کے خلاف پی آئی اے ملازمین کا احتجاج چوتھے روز بھی جاری ہے،ہیڈ آفس پر تالے پڑے ہیں، ٹریننگ سینٹر، سروسز کاوٴنٹرز ، مکینیکل وکشاپس میں کام بند ہے،قومی فضائی کمپنی اب تک ایک ارب سے زائد کا نقصان برداشت کر چکی ہے،ادھر کراچی ایئر پورٹ کے باہر عمرہ زائیرین نے پرازوں کی منسوخی کیخلاف احتجاج کیا۔

لاہور ایئرپورٹ پر ملازمین کی بڑی تعداد نے مرکزی یونین آفس کے باہر احتجاج کیا،ملتان میں بھی بکنگ آفس کے باہر ادارے کی مجوزہ نجکاری کیخلاف احتجاج جاری ہے،ہڑتال کے باعث لاہور،فیصل آباد ،سیالکوٹ سمیت پنجاب کے تمام ایئرپورٹس پر فلائٹ آپریشن متاثر ہے۔

اسلام آباد میں بے نظیرانٹرنیشنل ایئر پورٹ پر تمام شعبوں میں کام بند ہے۔پشاور میں ملازمین پی آئی اے بلڈنگ مال روڈ پر احتجاجی دھرنا دیئے بیٹھے ہیں اور فلائٹ آپریشن معطل ہے،کوئٹہ میں بھی پی آئی اے کے مرکزی دفتر کے تمام شعبوں کی تالا بندی کردی گئی ہے۔

loading...
loading...