کوئٹہ میں سیکیورٹی فورسز کی کارروائی ،3 دہشتگرد ہلاک،کرنل شہید

فائل فوٹو

فائل فوٹو

کوئٹہ:کوئٹہ میں سیکیورٹی فورسز کی کارروائی کے دوران کالعدم لشکرجھنگوی بلوچستان کا سربراہ 3دہشتگردوں سمیت ہلاک جبکہ فائرنگ کے تبادلے میں ملٹری انٹیلی جنس (ایم آئی )کے کرنل سہیل عابد شہید اور4اہلکار زخمی ہوگئے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق ملک بھر میں آپریشن ردالفساد کے تحت سیکیورٹی فورسز کی کارروائیاں کامیابی سے جاری ہیں۔

آئی ایس پی آر کے مطابق ،کوئٹہ کے علاقے کلی الماس میں سیکیورٹی فورسز نے  خفیہ اطلاع پر  خود کش بمباروں کی موجودگی پرانٹیلی جنس آپریشن کیا گیا،اِس دوران اس دوران دہشتگردوں کی جانب سے سیکیورٹی فورسز پر فائرنگ کی گئی۔

جوابی فائرنگ میں 100 سے زائد افراد کے قتل میں ملوث انتہائی مطلوب کالعدم لشکرجھنگوی بلوچستان کا سربراہ سلمان بادینی سمیت 3دہشتگردمارے گئے جن میں 2 خودکش بمبار ہلاک بھی شامل ہیں۔

ہلاک خودکش بمباروں کا تعلق افغانستان سے تھا جبکہ کارروائی کے دوران ایک دہشتگرد کو زخمی حالت میں گرفتار بھی کیا گیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق،دہشتگردوں سے فائرنگ سے ملٹری انٹیلی جنس کے کرنل سہیل عابد شہید جبکہ 4 سیکیورٹی اہلکار زخمی ہوئے، جن میں سے 2 کی حالت تشویشناک ہے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق،مطلوب کالعدم لشکرجھنگوی بلوچستان کا سربراہ سلمان بادینی ہزارہ برداری کے کئی لوگوں اور متعدد پولیس اہلکاروں کے قتل میں ملوث تھا۔

کارروائی کے دوران ملزمان کے قبضے سے بھاری تعداد میں اسلحہ بھی برآمد ہوا ہے۔

loading...
loading...