وائٹ کالر کرائم کو پکڑ لیا تو تمام مسائل حل ہوجائیں گے: چیف جسٹس

چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار-فائل فوٹو

چیف جسٹس آف پاکستان میاں ثاقب نثار-فائل فوٹو

اسلام آباد:چیف جسٹس آف پاکستان  میاں ثاقب نثار نے وائٹ کالر کرائم پر شکنجہ کسنے کیلئے پاناما طرز کی جے آئی ٹی بنانے کا حکم دیتے ہوئے کہاہے کہ  وائٹ کالر کرائم کو پکڑ لیا تو تمام مسائل حل ہوجائیں گے۔

سپریم کورٹ میں جعلی اکاونٹس ازخود نوٹس کیس کی سماعت ہوئی جس میں عدالت نے اکاؤنٹ ہولڈراور اسکینڈل میں ملوث افراد کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کا حکم دیا۔

جعلی اکاونٹس رکھنے والی آٹھ شخصیات کوبھی طلب کرلیا گیا۔

سماعت میں ڈی جی ایف آئی اے بشیر میمن نےعدالت کوبتایاکہ سمٹ بینک سے35ارب روپے مختلف کاروباری گروپس کو منتقل ہوئے۔جن میں زرداری گروپ پرائیویٹ لمیٹڈ بھی شامل ہےجسےڈیڑھ کروڑ منتقل ہوئے۔سمٹ بنک کےحسین لوائی اورطحہ رضا کوگرفتارکیا جاچکا ہے۔

چیف جسٹس نے ڈی جی ایف آئی اے سے کہا کہ جن لوگوں سے آپ لڑنا چاہ رہے ہیں وہ آپ کے قابو میں نہیں آئیں گے۔آپ کو سپریم کورٹ کی مدد درکار ہوگی۔وائٹ کالر کرائم کو پکڑ لیا تو تمام مسائل حل ہوجائیں گے۔پاناما طرز پر جے آئی ٹی بنائیں جس میں فنانشل ماہرین بھی ہوں۔

عدالت نے سمٹ بنک، یوبی ایل اور سندھ بینک کے سی ای اوزکو طلب  کرلیا۔

جبکہ29جعلی اکاؤنٹس رکھنے والے آٹھ افراد کو بھی نوٹس جاری کردیئےعدالت نے آئی جی سندھ کوتمام افراد کی حاضری یقینی بنانے کا حکم دیتے ہوئےسماعت 12 جولائی تک ملتوی کردی۔

loading...
loading...