میانمار کی فوج کامسلمانوں کے قتل میں ملوث ہونے کا اعتراف

فائل فوٹو

فائل فوٹو

ینگون:میانمار کی فوج نے روہنگیا مسلمانوں کے قتل عام میں ملوث ہونے کا اعتراف کرلیا۔

روہنگیا مسلمانوں کی ابتر صورتحال کی ذمہ میانمار فوج نے پہلی بار اپنے جرم کا اعتراف کرلیا ،متعدد بار تردید کرنے کے بعد میانمار کی فوج نے پہلی بار تسلیم کیا ہے کہ روہنگیا میں مسلمانوں پر ہونے والے ظلم و ستم کے پیچھے میانمار کی فوج ہے ۔

میانمار کی فوج کے مطابق تحقیقات سے معلوم ہوا ہے کہ روہنگیا میں ہونے والی حالیہ کشیدگی میں فوج کے چار اہلکاروں نے انڈن گاؤں میں 10لوگوں کو ہلاک کیااور ساتھ ہی قصورواروں کیخلاف کارروائی کرنے کا اعلان بھی کردیا۔

میانمار حکومت پر روہنگیا مسلمانوں کی نسل کشی کے الزامات ہیں ،گزشتہ برس اگست میں پرتشدد واقعات میں 6ہزار سے زائد افراد قتل کئے گئے اور لاکھوں روہنگیا مسلمان بنگلہ دیش کے پناہ گزین کیمپوں میں مقیم ہونے پر مجبور ہوگئے ۔