مشرف دورمیں شہری پیسوں کے عوض امریکا کو دیئےگئے،خواجہ آصف

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد:وزیرخارجہ خواجہ آصف کا کہنا ہے کہ مشرف دورمیں شہری پیسوں کے عوض امریکا کو دیئےگئے، کسی ملک کےشام میں فوج بھیجنے پرردعمل نہیں دےسکتے،شام معاملےمیں براہ راست شامل ہوکرمشکلات میں نہیں پڑناچاہتے۔

بدھ کو  قومی اسمبلی میں وزیرخارجہ خواجہ آصف نے 3پاکستانی قیدیوں کی گوانتا نامو بے جیل میں موجودگی کا انکشاف کیا۔

انہوں نے بتایا کہ تینوں پاکستانی شہریوں کو بغیر کسی الزام کے قید کیا گیا،اس معاملے پر امریکا سے رابطے میں ہیں۔

وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ پرویز مشرف نے پیسوں کے عوض پاکستانی شہری امریکا کے حوالے کئے۔

خواجہ آصف کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان شام کا مسئلہ سفارتی طور پر حل کرنے کیلئے کوشاں ہے۔

امریکی سفارتکار کی گاڑی سے نوجوان کی ہلاکت سے متعلق سوال پر  خواجہ آصف نے کہا کہ اس معاملے پر قانون کے مطابق کارروائی ہوگی، امریکی سفارتکار پاکستان میں ہی موجود ہے اور امریکی سفارتخانے نے اس معاملے پر تعاون کی یقین دہانی کرائی ہے۔

دوسری جانب وزارت خارجہ نے قومی اسمبلی میں  تحریری جواب میں کہا ہے کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں آبادی کا تناسب تبدیل کر رہا ہے اس معاملے پراقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل اورسلامتی کونسل کوخطوط لکھے ہیں۔

loading...
loading...