لاہور کے سرکاری اسپتالوں کے سربراہان سے درپیش مسائل کی رپورٹ طلب

فائل فوٹو

فائل فوٹو

لاہور: سپریم کورٹ نے لاہور کے سرکاری اسپتالوں کے سربراہان سے در پیش مسائل سے متعلق رپورٹ 24فروری تک طلب کر لی۔

ہفتے کو چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں 3رکنی بینچ نے سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں  سرکاری اسپتالوں کی ناقص صورتحال کے خلاف از خود نوٹس کیس کی سماعت کی۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا میو اسپتال کا جب سے دور کیا ہے تب سے دل پر بوجھ لئے پھر رہا ہوں،جس اسپتال کو بچپن اور جوانی میں دیکھا اس کی حالت بھی بہتر کرنا چاہتا ہوں، سرکاری اسپتالوں میں اعلیٰ قسم کی ایمرجنسی اور اچھا صحت کا نظام چاہتے ہیں۔

چیف جسٹس نے کہا کہ 2دو ماہ کے بچوں کو کئیر نہیں مل رہی ،مریضوں کی خدمت کرنا سب کی ذمہ داری اور فرض ہے۔

عدالت نے سرکاری اسپتالوں کے ایم ایس سے مسائل کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے سماعت 24فروری تک ملتوی کر دی۔

loading...
loading...