ایک اور تحریک آنے والی ہے اس کیلئے تیار رہیں،چیف جسٹس

فائل فوٹو

فائل فوٹو

اسلام آباد: چیف جسٹس ثاقب نثار نےغیر قانونی شادی ہال کیس میں ریمارکس دیئے ہیں کہ ایک اور تحریک آنے والی ہے اس کیلئے تیار رہیں،ہمارا ساتھ نہ دیں سسٹم کا ساتھ دیں۔

پیر کو سپریم کورٹ میں چیف جسٹس کی سربراہی میں غیر قانونی شادی ہال کیس کی سماعت ہوئی تو شادی ہال مارکی کے مالک جمیل عباسی نے عدالت میں مؤقف پیش کیا کہ ان کا شادی ہال قانونی ہے۔

چیف جسٹس نے پوچھا کہ مارکی کے مالک جمیل عباسی کا پس منظر کیا ہے،جمیل عباسی بولے 3بار عدلیہ بحالی تحریک میں جیل گیا۔

چیف جسٹس نے جواب دیا کہ ہوسکتا ہے کہ چوتھی بار بھی آپ کو جیل جانا پڑے،ایک تحریک آنے والی ہے اس کیلئے بھی تیار رہیں۔

جمیل عباسی نے کہا کہ تحریک شروع ہوئی تو عدلیہ کے ساتھ ہوں گے،جس پرچیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ ہمارا ساتھ نہ دیں،سسٹم کا ساتھ دیں۔

عدالت نے سی ڈی اے سے نیشنل پارک کا نقشہ طلب کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ شادی ہال پارک میں ہوا تو رات 12بجے تک ختم ہوگا۔

چیف جسٹس نے جسٹس اعجاز الاحسن کے گھر پر حملے سے متعلق ریمارکس دیئے کہ بار نے جس یکجہتی کا اظہار کیا اس پر شکر گزار ہوں،بار نے میرے کہنے پر ہڑتال واپس لی۔

loading...
loading...