امریکا نے پاکستان کے ساتھ فوجی تربیت کے منصوبے ختم کردیئے

فائل فوٹو

فائل فوٹو

واشنگٹن:خبر رساں ادارے روئٹرز نے دعویٰ کیا ہے کہ امریکا نے پاکستان کے ساتھ  فوجی تربیت کے منصوبے  ختم کردیئے جبکہ یو ایس نیول وار کالج، یو ایس نیول اسٹاف کالج اور سائبر سیکیورٹی تربیت کیلئے بھی دروازے بند کردیئے گئے ۔

امریکا نے پاکستان کیخلاف ایک اور متعصابہ اقدام  اٹھالیا، پاکستان کے ساتھ  فوجی تربیت کے منصوبے  ختم کردیئے۔

خبر رساں ادارے نے روئٹرز نے دعویٰ کیا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ نے خاموشی کے ساتھ پاکستانی افسران سے قطع تعلق کرتے ہوئے ایسے متعدد باہمی تربیتی اور تعلیمی منصوبوں کو ختم کردیا جو گزشتہ ایک دہائی سے بھی زائد عرصے سے دونوں ممالک کے درمیان مضبوط عسکری تعلقات کی بنیاد تھے۔

روئٹرز کے مطابق پاک فوج اور پینٹاگون نے براہِ راست اس پر کوئی رائے نہیں دی لیکن دونوں ممالک کے افسران نے ذاتی سطح پر اس فیصلے کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان کا کہنا ہے کہ پاکستان کیلئے انٹرنیشنل ملٹری ایجوکیشن اینڈ ٹریننگ پروگرام  کے تحت اس سال 66پاکستانی افسران کو تربیت فراہم کرنا تھیں۔

پینسلوانیا میں امریکی فوجی کالج کی فہرست میں ایک بھی پاکستانی فوجی افسر شامل نہیں ہے۔

loading...
loading...