اسرائیل کونسل پرست قراردینے والی اقوام متحدہ کی انڈر سیکریٹری مستعفیٰ

فائل فوٹو

فائل فوٹو

نیویارک: اسرائیل کونسل پرست قراردینے والی اقوام متحدہ کی انڈر سیکریٹری ریما خلف نے شدید دباؤ کے بعد اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا۔

اقوام متحدہ کی سینئر عہدیدارکا کہنا ہے کہ انہوں نے دباؤ کے باعث اپنے عہدے سے استعفیٰ دیا۔

ریما خلف اس کمیشن کی سربراہ تھیں، جو 18ملکوں میں معاشی اور سماجی ترقی کا مجاز ادارہ ہے۔

اسرائیل کے بارے میں  یہ رپورٹ اقوام متحدہ کے مغربی ایشیا کے معاشی اور سماجی کمیشن کی طرف سے شائع کی گئی تھی۔

ریما خلف نے کہا کہ یہ پہلی رپورٹ تھی جس میں اسرائیل کو نسل پرست قرار دیا گیا۔

 اقوام متحدہ کے جنرل سیکریٹری انتونیو گوتریس نے اپنے آپ کو اس رپورٹ سے علحدہ کرتے ہوئے کہا تھا کہ یہ رپورٹ اس کے مرتب کرنے والےکے خیالات کی عکاسی کرتی ہے۔

خلف جس کا تعلق اردن سے ہے میڈیا کو بتایا کہ انہوں نے اپنے عہدے سے استعفیٰ پیش کردیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ سیکریٹری جنرل ان پر رپورٹ واپس لینے کیلئے دباؤ ڈال رہا تھا۔