ترکش رقاصہ کا باپ کے ہاتھوں لرزاں خیز قتل

killed

انقرہ: ترکی کی ایک بیلی ڈانسر دائدم اوسلو کو ان ہی کے والد نے قتل کرکے لاش کو فریج میں چھپایا اور پھر بعد میں دفنا دیا۔

غیرملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق ترکی میں ایک معروف رقاصہ کو اس ہی کے والد نے قتل کرکے جسم کے ٹکڑے کئے، لاش کو فریج میں رکھا اور بعد میں اسے دفنادیا۔ بعد ازاں پولیس نے اس شخص کو گرفتار کیا جس کے بعد ملزم نے اعتراف جرم کرلیا۔

Image result for Didem Uslu

ملزم نے اعتراف کیا کہ اس نے 32 سالہ بیلی ڈانسر دائدم اوسلو کو ذاتی وجوہات کی بناء پر قتل کرکے جسم کو چھوٹے ٹکڑوں میں کاٹا اور پھر ان ٹکڑوں کو کچھ دن کے لئے فریج میں بھی رکھا۔

Image result for Didem Uslu

مقامی میڈیا رپورٹس کے مطابق 55 سالہ ملزم حسن اوسلو بنیادی طور پر کباب فروش ہے، اس کی شہر کے مصروف علاقے میں گوشت کی دکان ہے، دکان سے انتہائی خراب حالت میں انسانی اعضاء کے ٹکڑے ملنے کے بعد پولیس کو اس پر شک ہوا۔

Image result for Didem Uslu

انسانی اعضاء کی برآمدگی کے بعد پولیس نے جاسوس کتوں کی مدد اور تفتیش کے بعد یہ پتہ لگایا کہ ملنے والے اعضاء ایک خاتون کے تھے۔

Image result for Didem UsluImage result for Didem UsluImage result for Didem Uslu

پولیس نے ابتدائی طور پر ٹکڑے ٹکڑے کرکے قتل کی گئی بیلی ڈانسر کے والد کو گرفتار کیا، جنہوں نے اپنی بیٹی کو قتل کرنے اور ان کے ٹکڑے جنگل میں دفنانے کا اعتراف کیا۔

loading...
loading...