ہریتک روشن کو سزا ۔۔۔؟

1111

بالی وڈ اداکارہ کنگنا رناوت نےمطالبہ کردیا ہے کہ  ہریتک روشن کو بھی سزا دی جائے ۔ زی نیوز  کو انٹر ویو  دیتے ہوئے  کنگنا نے کہا کہ  ہریتک کو بھی سزا ملنی چاہیئے کیونکہ  انہوں نے می ٹو مہم کی خلاف ورزی کی ہے  ، انہوں نے مزید کہا کہ ہریتک نے   اپنی بیوی کے ہوتے ہوئے جوان لڑکی کے ساتھ  ملاقات کی جو کہ اچھا عمل نہیں جس پر ان کو سزا دینی چاہیئے ۔

جب کنگنا سے ویکاس بہل کے بارے  میں پوچھا گیا تو انہوں نے کہا کہ ان کے ساتھ جو بھی ہو رہا ہے بلکل ٹھیک ہورہا ہے ۔فلم انڈسٹری میں بہت سے ایسے لوگ موجود ہیں جو  خواتین کے ساتھ اچھا رویہ اختیا ر نہیں کرتے ،ایسے لوگوں کو سزا ملنی چاہیئے ۔

انہوں نے ہریتک کا حوالہ دیتے ہوئے مزید کہا کہ  جو لوگ اپنی بیویوں کو  انعام سمجھتے ہیں اور  جوان لڑکیوں کو  مالکن سمجھتے ہیں ان کو سزا ملنی چاہیئے ۔

یاد رہے کہ کنگنا نے ویکاس بہل کی فلم کیوئن میں ہیروئن کا   کردار ادا کیا ہے ، انڈیا ٹودے کو انٹر ویو  دیتے ہوئے  کنگنا نے کہا کہ  جب بھی ویکاس بہل  مجھ سے ملتےتھے  ہمیشہ گلے لگ کر ملتے تھے  اور گردن سے اپنے چہرے کو لگا لیا کرتے تھے  اور بالوں میں سانس لیا کرتے تھے جو بہت عجیب  بات تھی  اور ان کی اس حرکت سے مجھے شرمندگی محسوس ہوتی تھی  اور ساتھ میں یہ بھی بول دیا کرتے تھے کہ  آپ کے جسم کی جوشبو سے مجھے پیا ر ہے  اور  شادی ہوجانے کے بعد بھی وہ  دوسری خواتین کے ساتھ رات گزارتے تھے  یہ باتیں انہوں نے خود کیوئن فلم کی فلم سازی کے دوران بتائیں ۔

ہریتک روشن نے سوشل میڈیا پر ایک پوسٹ کی ہے جس میں انہوں نے لکھا ہے  کہ میرے لئے بہت مشکل ہے کہ میں ایسے کیسی مرد یا رورت کے ساتھ کا م کروں جو شرمندہ ہو کہ اس نے کبھی ایسا کیا ہے ۔ہریتک نے مزید کہا کہ وہ اپنی فلم کے پروڈیوسر سے کہا  کہ جنسی ہراسگی کے خلاف ان کو کھڑے ہونا چاہیئے کیونکہ یہ بات چھپانے کی نہیں ہوتی اس پر فوری کاروائی ضروری ہے  اور جن لوگوں پر الزام ثابت ہوجائے ان کو سزا ملنی چاہیئے ۔

 

Source : Jinnions

 

loading...
loading...